واٹر بورڈ کی نجکاری نہیں جائیگی. سی ای او واٹر بورڈ انجینئر سید صلاح الدین احمد

Total
0
Shares

ایم ڈی / چیف ایگزیکٹو آفیسر واٹر بورڈ انجینئر سید صلاح الدین احمد اور چیف آپریٹنگ آفیسر واٹر بورڈ انجینئر اسدالله خان سے متحدہ ورکرز فرنٹ سی بی اے کے چیئرمین ارشاد خان، صدر ندیم یوسف، جنرل سیکرٹری وسیم ابراھیم کی سربراہی میں آنے والے وفد نے ایم ڈی سیکریٹریٹ میں ملاقات کی

اس موقع پر سی بی اے عہدیداران نے سی ای او اور سی او او سے واٹر بورڈ کی نجکاری کے حوالے سے تحفظات سمیت میڈیکل ڈپارٹمنٹ میں بہتری کے لیے اقدامات کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ ڈیواگو فارمیسی کے علاؤہ واٹر بورڈ کے پینل پر دیگر میڈیکل اسٹورز اور ہسپتال کی اسکورنٹی کی جائے اور جو میڈیکل اسٹورز اور ہسپتال ملازمین کو بہتر سہولیات فراہم نہیں کر رہے ہیں انکے خلاف فوری کاروائی کی جائے جبکہ میڈیکل ڈپارٹمنٹ کا تمام اسٹاف تبدیل کیا جائے، اس کے علاؤہ واٹر بورڈ کے کنزیومر دفاتر میں بجلی کے مسائل حل کیے جائیں، اور ملازمین کے فنڈ کے مد میں رقم مختص کی جائے.

جبکہ سی ای او واٹر بورڈ کا اس موقع پر کہنا تھا کہ واٹر بورڈ ریکوری بہتر ہوگی تو کافی مسائل خود بخود حل ہو جائینگے، انہوں نے سی بی ای اراکین کو مکمل یقین دھانی کراتے ہوئے کہا کہ واٹر بورڈ کی نجکاری نہیں جائیگی اور نہ ہی کسی ملازم کو نوکری سے فارغ کیا جائے گا.

ان کا کہنا تھا سندھ حکومت اور ورلڈ بینک نے مشترکہ فیصلہ کیا ہے کہ واٹر بورڈ کو مثالی ادارہ بنایا جائیگا

جبکہ انہوں نے کہا کہ ورلڈ بینک نے واٹر بورڈ کا نیا دفتر بنانے کے لیے ہمیں فنڈز جاری کیے تھے مگر ہم نے اسی دفتر کو بہتر بنانے کا فیصلہ کیا ہے اسی طرح ادارے میں بھی مزید اصلاحات اور بہتری لائے جائے گی.

انہوں نے کہا کہ ڈسپلن پر پوری کائنات کا نظام چل رہا ہے اور جب ڈسپلن ختم ہوگا تب دنیا کا نظام ختم ہو جائیگا اسی طرح میں بھی ڈسپلن کے اوپر کوئی سمجھوتا نہیں کرونگا، ادارے میں بہتری کے لیے ڈسپلن پر مجھ سمیت سب کو عمل کرنا ہوگا کیونکہ واٹر بورڈ ہم سب کا ادارہ ہے اس لئے سب کو ملکر کام کرنا ہوگا اور کام نہ کرنے والوں کے خلاف سخت ایکشن لیا جائے گا،

سی او او کا مزید کہنا تھا کہ ایم ڈی انسپکشن ٹیم بنائی جائے گی جو کام نہ کرنے والوں اور غیر حاضر رہنے والے ملازمین کے خلاف کاروائی کریگی،

انہوں نے کہا کہ واٹر بورڈ نے محدود وسائل کے باوجود شہریوں میں اپنی ساکھ قائم رکھی ہوئی ہے جس پر ادارے کے ملازمین کو خراجِ تحسین پیش کرتا ہوں،

ملازمین کے واجبات کے حوالے انکا کہنا تھا کہ آج وائس چیئرمین واٹر بورڈ سید نجمی عالم سے ملاقات کے دوران اتفاق ہؤا کہ ریٹائرڈ ملازمین کے واجبات کی ادائیگی کے لیے سندھ حکومت سے بھی بات کی جائے گی،

واٹر بورڈ کے افسر کا مزید کہنا تھا کہ سی او او واٹر بورڈ انجینئر اسدالله خان نے واٹر بورڈ کی بہتری کے لیے کافی خدمات سرانجام دی ہے امید ہے وہ آگے بھی اپنا بھرپور کردار ادا کرتے رہیں گے

اس موقع پر سی او او واٹر بورڈ انجینئر اسدالله خان کا کہنا تھا کہ ایکٹ میں واضح طور پر لکھا ہوا ہے کہ واٹر بورڈ نجکاری نہیں ہوگی صرف اور صرف ادارے کی بہتری اور اصلاحات کے لیے نیا نظام متعارف کروایا گیا ہے انہوں نے کہا کہ میں حلفیہ کے رہا ہوں کہ واٹر بورڈ کی نجکاری نہیں ہوگی بلکہ ہمارا اصل مقصدصرف اور صرف ادارے میں بہتری اور اصلاحات لانا ہے تاکہ

شہریوں سمیت ملازمین کو بہتر سہولیات فراہم کی جائیں

اجلاس کے موقع پر اسٹاف آفیسر ٹو سی ای او واٹر بورڈ ملک انوار الحق بھی موجود تھے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

You May Also Like

وین ڈرائیورز دوران سفر بچوں کی حفاظت پر خصوصی توجہ دیں، رفیعہ جاوید ملاح

ر فیعہ جاوید، ایڈیشنل ڈائریکٹر (رجسٹریشن)، ڈائریکٹوریٹ آف انسپیکشن اینڈ رجسٹریشن آف پرائیویٹ انسٹی ٹیوشنز سندھ، اسکول ایجوکیشن اینڈ لٹریسی ڈپارٹمنٹ حکومت سندھ کی جانب سے تمام والدین، ڈرائیوروں اور…
View Post

حضرت صاحبزادہ سید محمد متین محبوبی چشتی کے 43 ویں عرس کی تقریبات کا آغاز 23 مارچ سے کیا جائے گا

سلسلہ چشتیہ و پاکستان کے نامور بزرگ خواجہ خواجگان حضرت صاحبزادہ سید محمد متین محبوبی چشتی قلندری دہلوی کے 43ویں عرس شریف کی تقریبات ہر سال کی طرح اس سال…
View Post